لو جہاد اور بی جے پی کے سیاسی عزائم

لو جہاد کے نام پر مختلف ریاستوں میں قوانین بنائے جارہے ہیں، پہلے بھی یہ بنائے گئے اور اِن دنوں یہ مزید سرخیوں میں ہیں۔آر ایس ایس کا نظریہ کچھ ڈھکا چھپا نہیں ہے اور نہ ہی وہ مبہم انداز میں اپنے خیالات کا اظہار کرتی ہے، بی جے پی کے قائدین تو اپنی تقریرروں میں کھلے عام اس فکر پر مبنی نفرت آمیز بیانات دیتے رہتے ہیں جس کی وجہ سے ملک کی تاریخ میں بے شمار فسادات ہوچکے ہیں۔ مسئلہ یہی ہے کہ اگر بھاجپا اس قسم کے قوانین نہیں بنائے گی تو ان کی سیاست موثر نہیں رہے گی اور نہ ہی وہ حکمرانی کی گدی تک پہنچیں گے

حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی کے 14 طلبہ پر مقدمات درج ۔ اردو اخبارات خاموش، مسلم قیادت بے حس

حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی کے 14 طلبہ پر فروری میں ہوئے سی اے اے مخالف احتجاج کو لیکر کیس درج کیا گیا، رپورٹس کے مطابق 21 فروری کو مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی میں طلبہ نے مرکزی حکومت کے کالے قانون سی اے اے کے خلاف احتجاج کیا، جس پر تقریباً 8 ماہ بعد سائبرآباد پولیس نے طلبہ کے خلاف نوٹس جاری کیا. ان طلبہ نے حیدر آباد سنٹرل یونیورسٹی تا مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی تک پیدل ریالی نکالی بعد ازاں اردو یونیورسٹی میں احتجاج کیا۔ طلبہ کے مطابق انہیں ان مقدمات کا کوئی علم نہیں تھا،طلبہ کو 10 اکتوبر کو نوٹس ملی جس میں انہیں 6 اکتوبر کو پولیس اسٹیشن رپورٹ کرنے کی بات کہی گئی ا س پر طلبہ پریشان ہیں ، واضح رہے کہ لاک ڈاون کے پیش نظر تمام طلبہ اپنے اپنے گھروں کو جو کہ دیگر ریاستوں سے تعلق رکھتے ہیں واپس ہوگئے تھے، ایسے میں ان کا پولیس اسٹیشن کو رپورٹ کرنا انتہائی مشکل ہے، تاہم طلبہ پولیس سے مکمل تعاون کرنے تیار ہیں۔

بابری مسجد کا فیصلہ اور مسلم نوجوان

بابری مسجد کے فیصلے کے بعد بہت سارے تبصرے ماہرین کی جانب سے آرہے ہیں اور آئندہ بھی آتے رہیں گے، یہ اس بات کا ثبوت ہیکہ ملت اسلامیہ اپنے کاموں کا جائزہ لینے اور اسکا تجزیہ کرنے کے لئے فکر مند ہیں کہ آیا کونسا ایسا مقام ہے جہاں ہم سے غلطی سرزد ہورہی … جاری رکھئیے پڑھنا بابری مسجد کا فیصلہ اور مسلم نوجوان

ہندوستان میں صحافیوں پر حملے – سدباب ضروری

محمد فراز احمد ہندوستان میں آئے دن صحافیوں پر ہورہے حملے انتہائی تشویشناک ہیں، اس مضمون میں ان شاء اللہ ان حملوں کی طرف کچھ اشارات اور اس کے حل کے لیے کچھ نکات پیش کئیے جائیں گے، گوکہ یہ ناکافی ہوں گے لیکن ملک کے باشعور طبقہ کو مزید غور کے لیے آمادہ کریں … جاری رکھئیے پڑھنا ہندوستان میں صحافیوں پر حملے – سدباب ضروری

دودھ ہے ڈبے کا اور تعلیم ہے سرکار کی

محمد فراز احمد کسی بھی ملک کی ترقی کا انحصار ملک کے اقتصادی اور تعلیمی معیار سے لگایا جاسکتا ہے. یوں تو ملک کی ترقی میں کئی عوامل کارفرما ہوتے ہیں لیکن اقتصادی نظام اور تعلیمی نظام ملک کی ترقی میں اہم کردار ادا کرتے ہیں. لیکن بات ہمارے ملک ہندوستان کی کی جائے تو … جاری رکھئیے پڑھنا دودھ ہے ڈبے کا اور تعلیم ہے سرکار کی

مودی حکومت…! انسانیت شرمسار

قومی دارلحکومت نئی دہلی سے تقریباً 30 کلومیٹر دور اتر پردیش کے ضلع گوتم بدھا نگر کے موضع دادری میں بیف کے نام پر تشددت نے نہ صرف ہندوستانیت بلکہ انسانیت کو بھی شرمسار اور ریزہ ریزہ کردیا. ایک بے قصور ضعیف 50 سالہ شہری جسے جھوٹے الزام اور زعفرانی ذہنیت کے اشتعال کا شکار … جاری رکھئیے پڑھنا مودی حکومت…! انسانیت شرمسار

یوم آزادی – نیشنل ازم – مسلمان

گزشتہ پونے چار سال سے نیشنل ازم کی گفتگو عروج پر ہے، ہر کوئی اپنی دیش بھکتی ثابت کرنے کی دوڑ میں لگا ہوا ہے. ہندو ہو کہ مسلمان جو بھی اس دوڑ میں پیچھے رہ گیا وہ یا تو دیش کا غدار ہوگیا یا اسے پاکستان جانے کا مفت ٹکٹ مل گیا، اور یہ … جاری رکھئیے پڑھنا یوم آزادی – نیشنل ازم – مسلمان

کرکٹ میچ دیش بھکتی کا ثبوت نہیں

محمد فراز احمد       ہندوستان پاکستان کے مابین کرکٹ مقابلہ آج ایک جنگ کی شکل لے چکا ہے، جہاں میدان جنگ کرکٹ گراؤنڈ ہے، تلوار اور ڈھال، بلا اور گیند ہیں، تیر اور نشتر، جملہ بازی اور مغلظات ہیں. فرق صرف اتنا ہے کہ جنگ میں تماشائی نہیں ہوتے اور کرکٹ کی اس جنگ میں … جاری رکھئیے پڑھنا کرکٹ میچ دیش بھکتی کا ثبوت نہیں

6 ڈسمبر ـ یومِ سیاہ ، یومِ پیغام

      (محمد فراز احمد)           1992 کے بعد سے مسلمان 6 ڈسمبر کو یوم سیاہ کے طور پر مناتے ہیں اور اپنے غم و غصہ کا اظہار مختلف انداز میں کرتے ہیں، یقیناً اپنے غم و غصہ کا اظہار کرنا چاہئے، کیونکہ بابری مسجد کی شہادت کا مسئلہ محض مسلمانوں کا مسئلہ نہیں ہے بلکہ یہ … جاری رکھئیے پڑھنا 6 ڈسمبر ـ یومِ سیاہ ، یومِ پیغام